زین باغات کی ضرورت کی۱۰ وجوہات

Request quote

Invalid number. Please check the country code, prefix and phone number
By clicking 'Send' I confirm I have read the Privacy Policy & agree that my foregoing information will be processed to answer my request.
Note: You can revoke your consent by emailing privacy@homify.com with effect for the future.

زین باغات کی ضرورت کی۱۰ وجوہات

Shahtaj Shahtaj
 Garden by japan-garten-kultur,
Loading admin actions …

آپ سوچ رہے ہونگے کہ زین باغ کیا ہوتا ہے؟ زین باغ جاپانی پتھریلا باغ ہوتا ہے، جو بجری، پتھر اور گول پتھر پر زیادہ تر مشمل ہوتا ہے۔ خم دار لکیروں میں یہ فراہم کیے جاتے ہیں، یا صرف دیکھیں – اس نے زین کے راہبوں کو صدیوں سے اپنی مراقبہ کے حصے کے طور پر خدمت کی ہے۔ جاپان میں، جاپان کی یہ خاص ترتیب  کری سن سئی کہلاتی ہے، جو ایک خشک زمین کی تزئین کے طور پر یا جعلی زمین کی تزئین کا سرسری ترجمہ کرتا ہے۔

یہ خشک باغ، جو زین باغ کہلاتے ہیں، ہمارے عرض بلد میں بہت مقبول ثابت ہوئے ہیں۔ وجوہات ظاہر ہیں: ایک طرف، اس قسم کے باغ برقرار رکھنے مین آسان ہوتے ہیں، خاص کر جب مرکزی طور پر بجری استعمال ہو۔ دوسری طرف، یہ قسم ظاہری طور پر انتہائی دلکش نظر آتی ہے اور آپ کے گھر میں ایک پرسکون نخلستان بناتی ہے۔ تاکہ آپ ہر دن کی مصروفیت سے نجات پا سکیں۔ 

ہم آپ کو دس بہت خوبصورت جرمن کے باغبان دکھائینگے اور آپ کو تجاویز دینگے کہ کس طرح آپ اپنا جاپانی خشک باغ بناسکتے ہیں۔

۱۔ خالص آرام

زین استعمال کرنے کی ایک وجہ اسکا سکون بخشتا اثر ہے۔ پتھریلے باغ کے ساتھ کام کرنے کے ذریعے، کشیدگی، جلد اور ہلچل سب ختم ہوجاتا ہے۔

اصل زین کے باغ میں، ویسے تو، پودوں پر مکمل طور پر – کائی کے سوائے – اور پانی کے ساتھ معطل کر رہے ہیں۔ کیونکہ بجری یا مٹی کی سطحیں خشک باغ میں آب شار، دریا یا سمندر کے لئے رکے ہوتے ہیں۔ اس علامتیت پر کام کرنے کے لئے، پتھر کی سطحیں بل دار لکیروں کے ساتھ فراہم کی گئی ہیں۔ یہ لکڑی کے خاص تختے کے ساتھ کی جاتی ہے۔ مٹی پر لکیریں بنانا ایک مراقبہ اثر چھوڑتا ہے اور استحکام اور سکون یقینی بناتا ہے۔ یہ ضروری ہے کہ جتنا ہوسکے آپ لکیروں کی شروعات اور اختتام کو نہ پہچانیں، وہ آپس میں آہستہ سے گزر جانی چاہئے۔ گول پتھر – جو پربت اور پہاڑ کو ظاہر کریں – وہ لکیروں کی ترتیب سے بھی تائید ہوں۔ عام طور پر، تمام انتہائی ہندسی شکلیں ناپسندیدہ ہیں، اثر قدرتی ہونا چاہئے۔ اس لئے، طاق نمبر ترجیع دیے جاتے ہیں، مثال کے طور پر گول پتھروں کی چٹانوں میں۔

۲۔ زین باغ ہر جگہ استفاد کیا جاسکتا ہے

دوسری وجہ گھر پر جاپانی نوع کی یہ ہے کہ تقریباََ ہر جگہ استعمال کی جاسکتی ہے۔ یہاں، ایک زین کا باغ دریا کو نظر انداز کرتے ہوئے بالکنی کی چھت پر رکھا گیا ہے، لیکن آپ گھر کے اندر ہی چھوٹی تبدیل صورت بھی منتخب کرسکتے ہیں۔ اگر آپ چاہیں، آپ اپنا پورا باغیچہ بھی اس طرح ڈیزائن کرسکتے ہیں، یا بیرونی جگہ کا صرف ایک کونا۔ بالکنی میں، جاپانی بالکنیاں بھی اچھی ہیں۔

یہاں روایتی لہروں کی ترتیب استعمال نہیں ہوئی ہے، بلکہ بجری کی سطھ کی بنیادی شکل خود ایک بڑی لہر جیسی لگ رہی ہے – روایتی خشک باغیچے کا ایک دلچسپ تغیرات۔

۳۔ بیرونی حصے کو خوبصورت بنائیں

دوسرا نکتہ جو زین کے باغ کے لئے بولتا ہے وہ ہے اسکی ہمہ گری اور اسکی انتہائی اداس باغ سے بہبود نخلستان میں تبدیل ہونے کی قابیلیت۔ اس تصویر میں، مثال کے طور پر، کچھ بھی اداس بیرونی علاقے کی یاد دہانی نہیں کرواتا، جو یہ برلین باغ کبھی ہوا کرتا تھا۔ پتھر کے ٹکڑے، کائی اور بانس سے بنا باڑ اب باغ کو جاپانی طرز میں سجا رہا ہے۔

اچھی چیز اس طرح کے خشک باغوں کی یہ ہے کہ، ظاہر ہے، انہیں بڑھنے اور فروغ پانے کے لئے کسی خاص موسم کی ضرورت نہیں پڑتی۔ اسی کے برعکس – جیسا کہ اس باغ کی ترتیب پتھر اور بجری پر مشتمل ہے، پھر بھی درگم کونا بھی قابل تعریف ہے۔

۴۔ منی زینگ کے نوع

ان لوگوں کے لئے جن کے پاس اپنے خود کے باغ نہیں ہیں، چھوٹے زین باغ بہترین ہیں۔ یہ با آسانی پوشیدہ ہیں اور آرام اور سکون کے احساس کے لئے چنچل راستہ فراہم کرتا ہے۔ اس مقصد کے لئے ایک مستطیل فریم اکثر استعمال کی جاتی ہے، جو مٹی، کنکر اور نیم قیمتی پتھروں سے بھر دی جاتی ہے۔ چھوٹے لکڑی کے تختے کے ساتھ آپ ہمیشہ سطح پر نئی ترتیب بنا سکتے ہیں۔ اگر آپ چاہیں، آپ اس چھوٹے باغ میں بونسائی بھی لگا سکتے ہیں۔

یہاں کنکروں کے بیچ ایک طرح کا چھوٹا پانی کا سوسن کا تالاب بنایا گیا تھا۔

۵۔ بیرونی مراقبہ

جاپانی باغ کی یہ ریکارڈنگ لوئر سایکسونی میں لائیبیناؤ کے قریب ایکھوف میں مناسب وجہ ہے آپکو خوش کرنے کے لئے، ہے نا؟

۱۹۹۶ سے، جاپانی باغبانی بنائی جاتی ہے۔ ۱۹۹۸ میں ایک زین خانقاہ وسیع باغ زمین کی تزئین میں ضم کیا گیا تھا۔ ایک قدرتی تالاب اور چائے کا گھر پوری دلکش تصویر کو مکمل کرتا ہے۔ زین باغ زین راہب کے لئے تربیت کے حصے کے طور پر استعمال ہوتا ہے۔

۶۔ جاپانی قدرتی صلاحیت کی بدولت خوابی باغ

بریمیرہیون میں اس نجی باغ میں، جاپانی باغبانی آخری شکل تخلیق کرتا ہے۔ یہاں، پودے اور پانی جاپانی نوع میں ضم کردیے جاتے ہیں، جسکا مطلب ہے کہ یہ کسی روایتی نوع سے مطابقت نہیں رکھتے۔ یہ، البتہ، بالکل بھی مقصد نہیں تھا۔ بلکہ، ایک باغ کی ڈیزائن تخلیق کی جانی چاہئے، جس میں قدرت اور کاشت پرامن توازن میں ہیں۔ یہ دماغی حالت کو بہتر بنانے کے لئے بھی استعمال ہوتا جب باغ کو دیکھا جاتا ہے – انسان کے لئے ایک مختصر چھٹیاں۔

۷۔ مغرب میں جاپانی باغ کی تشریح

اس گھر کا ڈیزائن جدید اور ہندسی اوسط ہے۔ گھر کے پیش منظر میں سبز جگہ انتہائی فصاحت آمیز بھی ہے، اسے جاپانی باغ کا ظہور دیتے ہوئے ایک، ڈرامائی شکل کا درخت نقطہ نظر ہے مناسب لان کی سطح پر۔ یہ نظارہ روایتی جاپانی باغ کی تشریح کی ہمارے عرض بلد میں ایک اچھی مثال ہے۔

۸۔ بونسائی

بونسائی، چھوٹا، بخوبی ترتیب اور جمالیاتی شکل کے پودے بہت مقبول ہیں۔ یہ روایتی خشک باغ میں فٹ نہیں ہوتے، لیکن جاپانی متاثر کن باغ میں بہترین ہیں۔ تو اگر آپ صرف جاپانی روانی کے ساتھ باغ چاہتے ہیں بغیر زین باغ کے سختی سے قوانین پر عمل پیرا ہونے کے، چھوٹے سجاوٹی درخت لگانا بہترین ہے۔

بہر کیف، آپ کو پہلے تفصیل سے چیک کرنا چاہئے، کون سے پودے کس جگہ کے لئے مناسب ہیں۔ کیونکہ بونسائی کو بہت دیکھ بھال کی ضرورت ہے اور صحیح طرح بڑھنے اور پنپنے کے لئے خاص روشنی اور موسمی حالات کی ضرورت ہوتی ہے۔

۹۔۱۔ سدا بہار جاپانی نوع: ڈیزائن

یہاں آپ جاپانی باغ کا ڈیزائن دیکھ سکتے ہیں، جو خاندان کے لئے محفوظ، ذاتی جگہ ہے۔ سدا بہار دیوان خانہ تمام اطراف سے پریشان کن نظروں سے محفوظ ہے اور اس طرح ڈیزائن کیا گیا ہے کہ یہ پورے سال استعمال کیا جاسکتا ہے۔ اگلی تصویر میں آپ مکمل باغ پر تعجب کرینگے۔

۹۔۲ ۔ حتمی جاپانی نوع

باغ سنگ خارا اور سدا بہار درخت سے ڈیزائن کیا گیا ہے۔ سنگ خارا کے بلاک آپکو تکیوں کے ساتھ مجموعے میں بیٹھنے کی اجازت دیتا ہے، آتشداں روشنی اور خوشگوار گرماہٹ فراہم کرتا ہے۔ نئے باغ میں ایک بوٹی کی کیاری بھی ہے۔ سنگ خارا کے بلاک اور پودے لگانے کے ذریعے، مکمل بیرونی جگہ آرامدہ جاپانی روانی حاصل کرتی ہے۔

۱۰۔ قدرت سے لطف اٹھائیں

سب سے اہم وجہ زین باغ یا جاپانی باغ کو منتخب کرنے کی اسکا قدرت کا تجربہ ہے۔ ا سے کوئی فرق نہیں پڑتا کہ چاہے آپ نے روایتی زین باغ کی سخت ضروریات پر عمل کیا ہے یا پودوں اور پانی کو ڈیزائن میں ضم کیا ہے۔ مرکزی چیز یہ ہے کہ آپ اپنے باغ میں اچھا محسوس کرینگے اور خود کے اور قدرت کے ساتھ ہم آہنگ ہوں۔

آپ مزید نفیس باغوں کے بارے میں جانیں یہاں: باغیچے کی صفائی کی ۵ کارآمد تجاویز

 Houses by Casas inHAUS,

Need help with your home project?
Get in touch!

Discover home inspiration!